پب جی موبائل نے بھارت میں مکمل پابندی کے بعد باضابطہ طور پر اپنی تمام سروسز ختم کردیں۔

ستمبر کے مہینے میں، بھارت کی وزارت الیکٹرانکس اور آئی ٹی نے 118 موبائل ایپس پر پابندی عائد کردی تھی جس میں مشہور بیٹل رائل گیم پب جی (PUBG) موبائل بھی شامل تھا۔ پابندی کے بعد پب جی کارپوریشن نے کھیل کو دوبارہ پٹری پر واپس لانے کے لئے کئی بار کوششیں کیں، لیکن متعدد ناکام کوششوں کے بعد کمپنی نے اعلان کیا ہے کہ وہ بھارتی صارفین کے لئے ہر طرح کی سروسز اور رسائی کو ختم کررہی ہیں۔

گذشتہ روز بھارت میں پب جی موبائل اور پب جی موبائل لائٹ نے کام کرنا چھوڑ دیا۔ پہلے تو یہ صرف کچھ نقشے تھے لیکن پھر تھوڑی دیر کے بعد اس کھیل پر مکمل طور پر پابندی عائد کردی گئی۔

پب جی موبائل کے حقوق ان کے انٹلیکچوئل پراپرٹی کے مالکان کو واپس کردیئے جائیں گے اور ٹینسنٹ (Tencent) کو اب بھارت میں پب جی فرنچائز کے حقوق نہیں ہوں گے۔ یہ واضح نہیں ہے کہ پب جی کارپوریشن پلیئر ڈیٹا کے ساتھ کیا کرے گی۔ اس بارے میں کوئی آفیشل بیان موجود نہیں ہے کہ آیا یہ حذف ہوجائے گا یا اس کو محفوظ کیا جائے گا، یا کس انداز میں رکھا جائے گا۔

یہ پابندی بھارت کی ایپس پر پابندی کی دوسری لہر کا ایک حصہ ہے۔ پہلی لہر کا آغاز جون میں ہوا تھا جس میں ملک نے چائینیز ایپس جیسے ٹک ٹاک، وی چیٹ اور کچھ شیاؤمی سے متعلق ایپس پر پابندی عائد کی تھی جس میں کمیونٹی اور ویڈیو کالنگ ایپ شامل ہیں۔

تبصرہ کریں

%d bloggers like this: