گوگل نے اینڈرائیڈ 11 گو ایڈیشن میں آنے والی نئی خصوصیات کا انکشاف کر دیا۔

اس ہفتے کے شروع میں گوگل نے گوگل پکسل ڈیوائسز سمیت مختلف اسمارٹ فونز کے لئے اینڈرائڈ 11 کی دستیابی کا اعلان کیا تھا۔ اینڈرائیڈ 11 کے اعلان کے بعد گوگل نے آج اینڈرائیڈ 11 گو ایڈیشن کا اعلان کیا۔ کمپنی نے اینڈرائیڈ 11 گو ایڈیشن میں آنے والی نئی خصوصیات کا بھی تفصیل سے ذکر کیا۔ یہاں ان خصوصیات کی فہرست ہے جس کے بارے میں صارفین آئندہ اینڈرائیڈ 11 گو ایڈیشن کے اپ ڈیٹ کے ساتھ دیکھنے کی توقع کرسکتے ہیں۔

بہتر مواصلات (communication)، رازداری (privacy) اور آسان استعمال (usability)

اینڈرائیڈ 11 (گو ایڈیشن) پر ایپس اینڈرائیڈ 10 (گو ایڈیشن) کی نسبت 20 فیصد زیادہ تیزی سے لانچ ہوتی ہیں جس سے آپ کے لئے بغیر فون پر دباؤ ڈالے ایپس کے مابین سوئچ کرنا آسان ہوجاتا ہے۔

سستا ہونے کا یہ مطلب نہیں رازداری اور سیکیورٹی سے سمجھوتہ کرنا چاہئے، اسی وجہ سے ہم نے یہ یقینی بنایا ہے کہ گو ایڈیشن کے اسمارٹ فونز کو کسی بھی اینڈرائیڈ ڈیوائس کی طرح رازداری کے لئے بھی صنعتی معیار کے مطابق رسائی حاصل ہو۔ اینڈرائیڈ 11 (گو ایڈیشن) رازداری (privacy) میں نئے اضافوں کے ساتھ آیا ہے جس سے یہ کنٹرول کرنا آسان ہوجاتا ہے کہ آپ کے ڈیوائس کے ڈیٹا کو کب اور کس طرح شیئر کیا جاتا ہے۔ ایک بار کی اجازت کے ساتھ،  آپ صرف ایک مثال کے طور پر اپنے مائیکروفون ، کیمرا یا لوکیشن جیسے مخصوص سینسرز تک کسی بھی ایپ کو رسائی فراہم کرسکتے ہیں۔ اور اگر آپ نے طویل مدت تک ایپ کا استعمال نہیں کیا تو ایپ کی تمام پرمیشنز "خود کار طریقے سے دوبارہ ” ختم ہو جائیں گی اور آپ کو فوری طور پر اس تبدیلی کی اطلاع موصول ہو جائے گی۔ اگلی بار جب آپ ایپ کھولیں گے تو آپ ہمیشہ کی طرح ایپ کو دوبارہ پرمیشنز دینے کا انتخاب کرسکتے ہیں۔

ایپ کی نئی خصوصیات

اس سال ہم نے اپنے ایپس کے سوئٹ میں بہتری بھی متعارف کروائی ہے جو خصوصی طور پر انٹری لیول اسمارٹ فونز کے لئے ڈیزائن کی گئی تھیں۔ مثال کے طور پر گوگل کے ذریعہ فائلوں میں سیف فولڈر ایک نئی خصوصیت ہے جو ذاتی فائلوں کو 4 ہندسوں کے پن انکرپٹڈ فولڈر میں اسٹور کرکے دوسروں کے ذریعہ کھولنے یا ان تک رسائی حاصل کرنے سے محفوظ رکھتی ہے۔

فائلوں کو محفوظ اور رازدارانہ طور پر پن انکرپٹڈ محفوظ فولڈر کے ساتھ براؤز کریں

زیادہ میموری، مزید ڈیوائسز، مزید اختیارات

پچھلے دو سالوں میں، اسمارٹ فون مینوفیکچررز زیادہ سستی قیمتوں پر دوہرے کیمرے یا فنگر پرنٹ اسکینرز جیسی خصوصیات کے ساتھ اعلی درجے کے اینڈرائیڈ ڈیوائسز تیار کر چکے ہیں۔ چونکہ ان میں سے زیادہ تر داخلی سطح کے اسمارٹ فونز زیادہ میموری استعمال کرنے والی خصوصیات میں آتے ہیں اس لئے ہمارے شراکت داروں نے ہم سے ان ڈیوائسز پر کارکردگی بہتر بنانے کے لئے کہا ہے، خاص کر تیز رفتار پراسیسنگ، اسٹوریج اور میموری کو لے کر۔ لہذا اگلے مہینے سے اینڈرائیڈ (گو ایڈیشن) تمام نئے ڈیوائسز پر دستیاب ہو گا جن میں 2 جی بی تک میموری ہو گی۔

2 جی بی تک توسیع کے ساتھ، ایپس 20 فیصد تک تیز رفتار لانچ ہوتی ہیں ، اور 270 ایم بی کی اضافی فری میموری کے ساتھ، لوگ پس منظر میں اب تین سے چار ایپس چلا سکتے ہیں۔ 2 جی بی ڈیوائسز پر اینڈرائیڈ (گو ایڈیشن) میں 900 ایم بی تک اضافی مفت اسٹوریج کی جگہ بھی ملتی ہے – جو 300 سے زیادہ سیلفیاں لینے اور ایک پوری فلم ڈاؤن لوڈ کرنے کے لئے کافی ہے۔ مستقبل میں اینڈرائیڈ 11 (گو ایڈیشن) داخلی سطح کے اینڈرائیڈ ڈیوائسز کیلئے دستیاب ہوگا۔ اگر آپ اس طرح کا ایک ڈیوائس استعمال کررہے ہیں تو پھر آپ گو ایڈیشن کے بارے میں مزید معلومات کے لئے گوگل کی متعین کردہ اینڈرائیڈ 11 گو ایڈیشن ویب سائٹ کا رخ کرسکتے ہیں۔

تبصرہ کریں