ایل جی (LG) کے ٹی کی شکل والے ڈوئل ڈسپلے ‘ونگ’ اسمارٹ فون کی پہلی ہینڈز-آن ویڈیو آن لائن لیک ہوگئی۔

سن 2020 بہت ساری وجوہات کی بناء پر یادگار رہے گا، لیکن ٹیکنالوجی کے دیوانےاسے ایک ایسے سال کے طور پر یاد رکھیں گے جس میں انھوں نے پہلی مرتبہ ٹی کی شکل کی طرح کا ایک ڈوئل ڈسپلے اسمارٹ فون دیکھا۔ ایل جی کا ‘ونگ’ دنیا کا پہلا ٹی سائز کا ڈوئل ڈسپلے اسمارٹ فون ہے۔ سلائیڈنگ میکانزم کی بدولت پہلی اسکرین ٹی سائز کے ڈیزائن میں گھوم سکتی ہے۔ خوش قسمتی سے، ہم یہ بھی جانتے ہیں کہ اسمارٹ فون واقعی اسی طرح کام کرتا ہے جیسے کل لیک ہونے والی اس ‘ونگ’ اسمارٹ فون کی پہلی ہینڈز-آن ویڈیو میں دکھایا گیا ہے۔

جیسا کہ آپ دیکھ سکتے ہیں، ہینڈز-آن ویڈیو صرف آٹھ سیکنڈ کا ہے، جس کا مطلب یہ ہے کہ یہ ایک تفصیلی جائزہ نہیں ہے کہ یہ اسمارٹ فون واقعتا کیسے کام کرتا ہے۔ بہرحال، منظر عام پر آنے والی ویڈیو میں اس کی جھلک ضرور ملتی ہے کہ اسمارٹ فون ٹی کی شکل والے عنصر میں کیا لگتا ہے۔

‘ونگ’ اسمارٹ فون ایل جی کے "ایکسپلورر پروجیکٹ” کا حصہ ہے اور کمپنی کو توقع ہے کہ یہ منصوبہ "موبائل سیکٹر میں انتہائی ضروری تجسس اور جوش و خروش فراہم کرے گا۔”

اس اسمارٹ فون میں 1:1 کے تناسب میں 4 انچ ثانوی ڈسپلے کے ساتھ 6.8 انچ کی مین اسکرین بھی نمایاں کی جائے گی۔ افواہ یہ بھی ہے کہ ڈوئل ڈسپلے والا فون اسنیپ ڈریگن 765 جی پراسیسر پہ چلے گا اور اس میں 64 ایم پی کا پرائمری کیمرہ ہوگا۔ ہمارے پاس اس ڈیوائس کی قیمت کے بارے میں کوئی معلومات نہیں ہے، لیکن اس حقیقت کو مد نظر رکھتے ہوئے کہ اس طرح کے ڈیوائس کو بنانے میں انجینئرنگ کی بہت کوشش کی جاتی ہے، ہم توقع کرتے ہیں کہ اس کی قیمت 1000 ڈالرز کے قریب ہوگی۔ جیسے جیسے ہم اس اسمارٹ فون کی ریلیز کی تاریخ کے قریب پہنچتے جائیں گے، جو کہ 14 ستمبر کو ہے، ویسے ویسے ہم اس کے بارے میں مزید معلومات حاصل کرنے کی کوشش کریں گے۔

تبصرہ کریں